وزیر اعلیٰ خالد خورشید نے سکردو میں بجلی بحران کے خاتمے کیلئے 6 بجلی گھروں کی منظوری دے دی

سینئر وزیر راجہ ذکریا خان مقپون نے کہاہے کہ وزیر اعلیٰ خالد خورشید نے سکردو میں بجلی بحران کے خاتمے کیلئے 6چھوٹے بڑے بجلی گھروں کی منظوری دے دی ہے اور یقین دلایا ہے کہ رمضان المبارک میں جنریٹر چلا کر روزہ داروں کو بجلی کی فراہمی کیلئے بارہ کروڑ روپے فراہم کئے جائیں گے. صوبائی حکومت بجلی کے بحران پر قابو پانے کیلئے طویل المدتی اور قلیل المدتی پالیسی مرتب کر رہی ہے انشاء اللہ جلد بجلی بحران پر قابو پالیں گے.

میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ سابق وزیر اعلیٰ اور سابق سینئر وزیر نے ایک میگا واٹ بجلی پیدا کرنے کی کوشش نہیں کی جس کی وجہ سے آج سکردو تاریکی میں ڈوبا ہوا ہے بحران کی اصل ذمہ دار مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی سابق صوبائی حکومتیں ہیں. ہم بجلی کے مسئلے کے پائیدا راور مستقل حل کے لئے کوشاں ہیں شغر تھنگ، ہر پوہ ، غواڑی سمیت دیگر بجلی گھروں پر جلد کام شروع کردیا جائے گا جس سے علاقے میں توانائی کے بحران پر قابوپانے میں مدد ملے گی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں